’’ حکومت نے چینی انکوائری کمیشن بنایا اور۔۔۔ ‘‘ سب کچھ کرنے کے باوجود ملک میں چینی کی قیمت کم کیوں نہیں ہورہی؟ حامد میر نے پاکستانیوں کے نام بڑا پیغام جاری کر دیا - Pakistan Point

Breaking

Post Top Ad

July 31, 2020

’’ حکومت نے چینی انکوائری کمیشن بنایا اور۔۔۔ ‘‘ سب کچھ کرنے کے باوجود ملک میں چینی کی قیمت کم کیوں نہیں ہورہی؟ حامد میر نے پاکستانیوں کے نام بڑا پیغام جاری کر دیا


سلام آباد( نیوز ڈیسک) سینئر صحافی حامد میر کا کہنا ہے کہ عمران خان کی حکومت نے چینی انکوائری کمیشن بنایا اور اسے اپنا کارنامہ بھی قرار دیا لیکن چینی کی قیمت کم ہونے کی بجائے بڑھتی ہی جا رہی ہے۔ تفصیلات کے مطابق سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں سینئر صحافی حامد میر کا کہنا تھا کہ ’’عمران خان کی حکومت نے چینی انکوائری کمیشن بنایا اور اسے اپنا کارنامہ بھی قرار دیا لیکن چینی کی قیمت کم ہونے کی بجائے بڑھتی ہی جا رہی ہے حکومت تو بے بس نظر آتی ہے لیکن عوام کے بس میں بہت کچھ ہے اگر عوام چینی کا بائیکاٹ کر دیں تو شوگر مافیا شکست کھا سکتا ہے‘‘ 
خیال رہے کہ وزیراعظم عمران خان کے نوٹس دیگر حکام کے دعوؤں کے باوجود ملک میں چینی کی قیمت میں مسلسل اضافے کا سلسلہ جاری ہے اور چینی 100 روپے فی کلو تک فروخت کی جانے لگی ہے۔وفاقی ادارہ شماریات نے بھی ملک میں چینی کی فی کلو قیمت100روپے تک پہنچنے کی تصدیق کردی ہے۔ادارہ شماریات کے مطابق اسلام آباد اورپشاور میں چینی 100 روپے کلو فروخت ہو رہی ہے جب کہ کراچی،راول پنڈی اور کوئٹہ میں چینی کی فی کلو قیمت 95روپے ہے۔اس کے علاوہ لاہور، فیصل آباد ، ملتان اور لاڑکانہ میں چینی کی قیمت 90روپے کلو ہے۔مہنگائی پر ادارہ شماریات کی جاری ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق سکھر ،حیدر آباد ،گوجرانوالہ،سیالکوٹ میں چینی 92 روپے فی کلو دستیاب ہے۔وفاقی ادارہ شماریات کے مطابق چار ہفتوں میں 11 روپے سے زائد اضافے کے بعد چینی کی اوسط قیمت92روپے کلو ہوگئی ہے۔ادارہ شماریات کے مطابق آٹے سمیت 17 اشیاء خورو نوش کی قیمتوں میں ایک ہفتے کے دوران اضافہ ریکارڈ کیا گیا، ایک ہفتے میں 20 کلو آٹا کا تھیلا 10 روپے، ٹماٹر 14 روپے فی کلو مہنگا ہوا، آلو پیاز کی قیمتوں میں بھی اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔رپورٹ کے مطابق ایک ہفتے کے دوران 8 اشیاء کی قیمتوں میں کمی ہوئی، چکن 15 روپے فی کلو سستا ہوا، دال مونگ 3 روپے، دال چنا، دال مسور 2 روپے سستی ہوئی جب کہ 26 اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے میں مجموعی طور پر مہنگائی صفر اعشاریہ 31 فی صد بڑھی۔

No comments: